مضامین

سخت ترین سیکورٹی انتظامات کے بیچ ریاست بھر میںیوم جمہوریہ کی تقریبات کا انعقاد

ریاست بھر میں یوم جمہوریہ کی تقاریب پر سکون ماحول میں اختتام کو پہنچ گئیں تھی جس دوران گورنر این این ووہرا نے جموں جبکہ مختلف ریاستی وزراء نے مختلف ضلع ہیڈکوارٹروں پر ترنگا لہرانے کی رسم انجام دی اور اپنی تقاریر میں ریاستی مخلوط سرکار کی حصولیابیاں گنوائیں۔یوم جمہوریہ کے موقعہ پرریاستی سطح کی سب سے بڑی تقریب جموں کے مولانا آزادا سٹیڈیم میں منعقد ہوئی۔ یہاں ریاست کے گورنر این این ووہرا نے پریڈ پر سلامی لینے سے قبل ترنگا لہرایا ۔پریڈ میں سکولی طلبہ وطالبات کے علاوہ پولیس،نیم فوجی دستوں اور فوج کی ٹکڑیوں نے حصہ لیا جبکہ فائر اینڈ ایمر جنسی سروس اور این سی سی کیڈٹس نے بھی پریڈ میں شمولیت کی۔اس تقریب میں گورنر کی اہلیہ محترمہ اوشا ووہرا، وزیرا علیٰ محبوبہ مفتی ، ریاستی اسمبلی کے سپیکر کویندر گپتا، قانون ساز کونسل کے چیئرمین حاجی عنایت علی، اسمبلی کے ڈپٹی سپیکر نذیر احمد گریزی، خزانہ کے وزیر ڈاکٹر حسیب اے درابو ، بھیڑ و پشو پالن کے وزیر عبدالغنی کوہلی ، سیاحت کے وزیر تصدق حسین مفتی ،ارکان قانون سازیہ ، ریاستی ہائی کورٹ کے چیف جسٹس ، جسٹس بدر دُریز احمد ، ہائی کورٹ کے جج صاحبان، سول و پولیس انتظامیہ کے اعلیٰ افسران، فوج کے افسران، سیاسی و سماجی کارکنوں، معزز شہری، ذرائع ابلاغ کے نمائندوں اور عام لوگوں کی ایک کثیر تعداد نے بھی شرکت کی۔مولانا آزادا سٹیڈیم میں یوم جمہوریہ کی تقریب دیکھنے کے لئے لوگوں کی ایک بھاری تعداد جمع ہوگئی تھی تاہم اُنہیں تلاشی کے کئی مراحل سے گزارنے کے بعد ہی اسٹیڈیم کے اندر داخل ہونے کی اجازت دی گئی۔ اس موقعہ پر محکمہ اطلاعات و تعلیم کے فنکاروں اوراسکولی طلبہ وطالبات نے ایک رنگا رنگ تمدنی پروگرام بھی پیش کیا جس سے موجود لوگ محظوظ ہوئے۔ اپنی تقریر کے دوران گورنر نے ریاستی مخلوط سرکار کی مجموعی کارکردگی کا خاکہ پیش کیا۔جموں کے متعدد بازاروں اور محلوں میں بھی عام لوگوں نے اپنی سطح پر ترنگا لہرا کر یوم جمہوریہ منایا۔
جموں کے دیگر خطے میں بھی یوم جمہوریہ کی تقریبات کا اہتمام کیا گیا
ادھمپور میں سب سے بڑی تقریب گورنمنٹ پی جی کالج بوائزمیں منعقد ہوئی ۔نائب وزیرا علیٰ ڈاکٹر نرمل سنگھ نے قومی پرچم لہرایا اور مارچ پاسٹ پر سلامی لی۔پریڈ میں37مختلف دستوں نے حصہ لیا جن میں سی آر پی ایف، ایس کے پی اے ،ہوم گارڈس ، ڈسٹرکٹ پولیس ، این سی سی ، فلیگ ٹروپس ،سول سکاٹس کے علاوہ سکولی طلبأ شامل ہیں۔اس موقعہ پر کئی دلچسپ پروگرام پیش کئے گئے جن میں حب الوطنی کے گیت اور ریاست جموں و کشمیر کے تمدن اور تہذیب کی عکاسی کی گئی۔اس کے علاوہ سکول بچوں نے رنگارنگ تمدنی پروگرام پیش کیا جس کی لوگوں نے بہت ستائش کی۔
ایم ایل اے ادھمپور پون کمار گپتا ، ایم ایل اے چننئی دیناناتھ بھگت ، ایم ایل اے رام نگرآر ایس پٹھانیہ ،ڈائریکٹر ایس کے پی اے ایم ایس سلاری ، ضلع ترقیاتی کمشنر ادھمپور رویندر کمار ، ایس ایس پی ادھمپور رئیس بٹ ، اے ڈی ڈی سی اروند شرما ، اے ڈی سی کرشن لال اور مختلف محکموں کے افسران ، سربراہاں ، سول و پولیس کے سینئر افسران اس موقعہ پر موجود تھے۔لوگوںکو یوم جمہوریہ کی مبارک باد پیش کرتے ہوئے نائب وزیر اعلیٰ نے کہا کہ ہمیں آزادی انتہائی جدوجہد اور مشکلات کے بعد حاصل ہوئی ہے ۔اس لئے ہر فرد پر یہ ذمہ داری عائد ہوتی ہے کہ وہ جنگ آزادی کے مجاہدین کی قربانیوں کی پاسداری کرتے ہوئے ملک اور قوم کی خدمت کریں۔ انہوںنے کہا کہ سردار بھگت سنگھ ، راج گورو، چندر شیکھر ، مدن لال ڈنگرا ، اشفاق اللہ جنہوں نے ملک کی آزادی کے لئے جانیں نچھاور کیںکوآج ہم شردھانجلی پیش کرتے ہیں۔اس سے قبل نائب وزیر اعلیٰ نے ڈی سی کمپلیکس اور ٹاون ہال ادھمپو رمیں بھی قومی ترنگا لہرایا اور پاس پاسٹ پر سلامی لی۔
ڈوڈہ میں سب سے بڑی تقریب سپورٹس سٹیڈیم ڈوڈہ میں منعقد ہوئی جہاںجنگلات ، صحت عامہ ، آبپاشی اور فلڈ کنٹرول کے وزیر مملکت ظہور احمد میر نے جھنڈا لہرا کر سلامی لی۔پریڈ میں پولیس،سی آر پی ایف،فارسٹ پروٹیکشن سروس،این سی سی کے دستوں کے علاوہ سکولی طلبأ نے حصہ لیا۔جب کہ رنگا رنگ تمدنی پروگرام بھی پیش کئے گئے۔یم ایل اے ڈوڈہ شکتی راج پریہار ، ایم ایل اے بٹہ مالونور محمد شیخ، سابق وزیر اور ایم ایل اے ڈوڈہ عبدالمجید وانی ، ڈی ڈی سی ڈوڈہ بھوانی رکوال، ایس ایس پی ڈوڈہ محمد شبیر کھٹانہ کے علاوہ سینئر افسران معزز شہریوں نے تقریب پر موجود تھے۔
سانبہ میں اراضی سٹیڈیم میںصنعت و حرفت کے وزیر چندر پرکاش گنگا نے قومی پرچم لہرا کر مارچ پاسٹ پر سلامی لی۔پریڈ میں پولیس،سی آر پی ایف،فارسٹ پروٹیکشن سروس،این سی سی کے دستوں کے علاوہ سکولی طلبأ نے حصہ لیا۔جب کہ رنگا رنگ تمدنی پروگرام بھی پیش کئے گئے۔
وائس چیئرمین جے اینڈ کے سٹیٹ ایڈوائزری بورڈ فار ویلفیئر اینڈ ڈیولپمنٹ آف اوبی سیز رشپا ل ورما، ایم ایل اے سانبہ ڈاکٹر دویندر کمار منیال ، ڈی سی شیتل نندا ، ایس ایس پی سانبہ انیل منگوترا ، اے ڈی سی تلک راج شرما کے علاوہ شہریوں کی ایک بڑی تعداد، سول اورپولیس انتظامیہ کے افسران نے تقریب میں شرکت کی۔وزیر نے تقریب سے خطا ب کرتے ہوئے لوگوں کو یوم جمہوریہ کی مبارک باد پیش کی اور امن ، بھائی چارے اور آپسی ہم آہنگی کے قدروں کی پاسداری کرنے کی تلقین کی۔
راجوری میں ڈسٹرکٹ پولیس لائینز میں سب سے بڑی تقریب منعقد ہوئی جہاں خوراک ، شہری رسدات و امور صارفین اور قبائلی امور کے وزیر چودھری ذوالفقار علی نے ترنگا لہراکر مارچ پاسٹ پر سلامی لی۔پریڈ میں پولیس،س جے کے ایگزیکٹیو پولیس ،سی آر پی ایف، لیڈی پولیس ، جے کے ایف پی ایف ،ہوم گارڈ ،این سی سی کے دستوں کے علاوہ سکولی طلبأ نے حصہ لیا۔جب کہ رنگا رنگ تمدنی پروگرام بھی پیش کئے گئے۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیرموصوف نے ہندوستان کے آئین کے آرکیٹکٹ کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہا کہ یہ آئین سب سے بڑا ہاتھ سے تحریر کردہ دستاویز ہے جس میں ملک کے اہم بنیادی نکات موجود ہے جن میں جمہوریت ، سوشلزم، سیکوازم اور قومی یکجہتی شامل ہے ۔
کشتواڑ میں صحت و طبی تعلیم کے وزیر بالی بھگت نے قومی پرچم لہرایا اور مارچ پاسٹ پر سلامی لی۔پریڈ میں پولیس،سی آر پی ایف،فارسٹ پروٹیکشن سروس،این سی سی کے دستوں کے علاوہ سکولی طلبأ نے حصہ لیا۔جب کہ رنگا رنگ تمدنی پروگرام بھی پیش کئے گئے۔ڈی ڈی سی کشتواڑ انگریز سنگھ رانا، ایس ایس پی کشتواڑ ابرار چودھری ، اے ڈی سی کشوری لال کے علاوہ دیگر افسران اور معزز شہری اس موقعہ پر موجود تھے۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے مہمان خصوصی نے کشتواڑ کے لوگوں کو یوم جمہوریہ کے سلسلے میں مبارک باد پیش کی۔ انہوں نے کہا کہ یہ دن ہمیں ملک کے عظیم رہنمائوں کی یاد دلاتا ہے جنہوںنے اپنی قربانیاں دے کر ملک کی آزادی حاصل کی۔
ریاسی میں امداد باہمی اور امور لداخ کے وزیر چیرنگ دورجے نے سپورٹس سٹیڈیم میں ترنگا لہرایا اورمارچ پاسٹ پر سلامی لی۔پریڈ میں پولیس، آئی آر پی ، ین سی سی کے دستوں کے علاوہ سکولی طلبأ نے حصہ لیا۔جب کہ رنگا رنگ تمدنی پروگرام بھی پیش کئے گئے۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے مہمان خصوصی نے ریلویز پروجیکٹوں پر جاری کام ، پی ایم جی ایس وائی کے تحت سڑکوں کا جال بچھانا اور دومیل ۔کٹرا ۔ ریاسی ۔ بامبلا جیسے علاقوں میں موجودہ سڑکوں کو قومی شاہراہ کا درجہ دینے کی بدولت علاقے میں لوگوں کو فراہم سہولیات کے بارے میں تذکرہ کیا۔
رام بن میں صحت عامہ ، آبپاشی و فلڈ کنٹرو ل کے وزیر شیام لال چودھری نے قومی جھنڈا لہرایا اورمارچ پاسٹ پر سلامی لی۔پریڈ میں پولیس،سی آر پی ایف،فارسٹ پروٹیکشن فورس،انڈین ریزرو پویس،ہوم گارڈ ، آرمی بینڈ آف مراٹھا ، لائیٹ انفنٹری 101 کے دستوں کے علاوہ سکولی طلبأ نے حصہ لیا۔جب کہ رنگا رنگ تمدنی پروگرام بھی پیش کئے گئے۔
ایم ایل اے رام بن نیلم کمار لنگے، ڈی ڈی سی رام بن طارق حسین گنائی، ڈی آئی جی ڈی کے آر رینج بسنت رتھ، ایس ایس پی رام بن موہن لال ،کمانڈنٹ سی آر پی ایف 84 و دیگر افسران اس تقریب پر موجود تھے۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر نے رام بن کے لوگوں کو یوم جمہوریہ کی مبارک باد دی اور ان تمام سپاہیوں اور فوجیوں کو خراج عقیدت پیش کیا جنہوں نے ملک کی حفاظت کرتے ہوئے اپنی جان نچھاور کی۔
پونچھ میں ٹرانسپور ٹ ، مال ، دیہی ترقی اور پی ڈبلیو ڈی کے وزیر مملکت سنیل کمار شرما نے قومی پرچم لہرایا اورمارچ پاسٹ پر سلامی لی۔پریڈ میںجے کے پولیس،ہوم گارڈس ،سی آر پی ایف،این سی سی کے دستوں کے علاوہ سکولی طلاب نے حصہ لیا۔جب کہ رنگا رنگ تمدنی پروگرام بھی پیش کئے گئے۔ایم ایل اے شاہ محمد تانترے ، ایم ایل سی یشپال شرما، ایم ایل سی پردیپ شرما، ایم ایل سی ڈاکٹر شہناز گنائی، ڈی ڈی سی طار ق احمد زرگر ، ایس ایس پی راجیو پانڈے ، اے ڈی ڈی سی عبدالحمید ، اے ڈی سی ڈاکٹر بشارت حسین ،بریگیڈکمانڈر اے ایس پندھار کر ، سابق رکن اسمبلی ، جہانگیر حسین میر کے علاوہ ضلع افسران ، معزز شہری اور سکولی بچوں نے تقریب میں حصہ لیا۔
کٹھوعہ میں جنگلات و ماحولیات کے وزیر چودھری لال سنگھ نے سپورٹس سٹیڈیم میں قومی جھنڈا لہرا کر مارچ پاسٹ کی سلامی لی۔پریڈ میں پولیس،سی آر پی ایف،فارسٹ پروٹیکشن سروس،پولیس ٹریننگ سکول کٹھوعہ،این سی سی کے دستوں کے علاوہ سکولی طلبأ نے حصہ لیا۔جب کہ رنگا رنگ تمدنی پروگرام بھی پیش کئے گئے۔اس موقعہ پر ممبر اسمبلی کٹھوعہ راجیو جسروٹیہ،ایم ایل اے بنی جیون لال ، ڈپٹی کمشنر کٹھوعہ روہت کھجوریہ ، ایس ایس پی کٹھوعہ سلیمان چودھری، ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریشپال سنگھ ، ضلع افسران ، جنگلات محکمہ کے افسران ، معزز شہری ، لوگوں کی بڑی تعدا د کے علاوہ سکول طلبائو و طالبات موجود تھے۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر نے کہا کہ یوم جمہوریہ ایک قومی فیسٹول ہے جو ہرسال 26؍ جنوری کو منایا جاتا ہے ۔انہوں نے کہا کہ اس دن کو منانا ہمارے لئے فخر اور عزت کی بات ہے کیونکہ اس دن ہمارام ملک ایک خودمختار جمہوری ملک بن چکا۔انہوںنے کہا کہ ہندوستان ایسا ملک ہے جہاں لوگوں کے منتخب نمائندے حکومت کرتے ہیں۔اس کے علاوہ تمام تحصیل صدر مقامات پر بھی یوم جمہوریہ کی تقریبات منعقد ہوئیں۔پریڈ کے علاوہ سرمائی راجدھانی جموں میں رنگا رنگ تمدنی پروگرام بھی پیش کئے گئے۔
ریاست میں یوم جمہوریہ کی دوسری بڑی تقریب کا اہتمام شیر کشمیر کرکٹ ا سٹیڈیم سرینگر میں کیا گیا۔یہاں مال اور پارلیمانی امور کے ریاستی وزیر عبدالرحمان ویری نے مہمان خصوصی کی حیثیت سے ترنگا لہرایا، پریڈ کا معائینہ کیا اور مارچ پاسٹ پر سلامی لی۔تقریب میں کئی ممبران قانون سازیہ کے ساتھ ساتھ انتظامیہ اور پولیس کے سینئر افسران بھی موجود تھے جن میں صوبائی انتظامیہ کے سربراہ بصیر احمد خان،پولیس کے ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل منیر احمد خان اورضلع ترقیاتی کمشنر سرینگر عابد رشید شاہ بھی شامل تھے۔پریڈ میں پولیس،سی آر پی ایف، آرمڈ پولیس، فائر اینڈ ایمر جنسی سروس ، ہوم گارڈس اور این سی سی کیڈٹس کے علاوہ مختلف اسکولوں کے طلبا نے بھی حصہ لیا۔تقریب کے آخر پر طلبہ وطالبات اور فنکاروں نے رنگا رنگ تمدنی پروگرام پیش کرکے حاضرین کو محظوظ کیا۔اس سے قبل اپنے خطاب میں عبدالرحمان ویری نے پی ڈی پی بی جے پی مخلوط سرکار کی اب تک کی کارکردگی کا مجموعی خاکہ پیش کیااور کہا کہ حکومت نے ریاست کی تعمیر و ترقی اور عوامی فلاح و بہبودکا جو ایجنڈا مرتب کیا ہے، اسے سرعت کے ساتھ عملی جامہ پہنانے کی کوششیں کی جارہی ہیں ۔
سرینگر کے ساتھ ساتھ وادی کے دیگر ضلع صدر مقامات پر بھی یوم جمہوریہ کی تقریبات کا اہتمام کیا گیاجن میں ریاستی وزراء نے پرچم کشائی اور مارچ پاسٹ پر سلامی لینے کی رسم انجام دی۔وسطی کشمیر کے بڈگام ضلع ہیڈکوارٹر پر وزیر زراعت غلام نبی لون ہانجورہ اورگاندربل میں وزیر مملکت آسیہ نقاش، شمالی کشمیر کے بارہمولہ میں باغبانی کے وزیر سید بشات بخاری، کپوارہ میں سماجی بہبود کے وزیر سجاد غنی لون اور بانڈی پورہ میں تکنیکی تعلیم کے وزیر عمران رضا انصاری جبکہ جنوبی کشمیر کے ضلع صدر مقام اننت ناگ پردیہی ترقی کے وزیر عبدالحق خان ،شوپیان میں امداد و بازآباد کاری کے وزیر جاوید مصطفےٰ میراور کولگام میں تعمیرات عامہ کے وزیر نعیم اخترپریڈ کا معائینہ کیا، ترنگا لہرایا اور مارچ پاسٹ پر سلامی لینے کے علاوہ اپنی تقریر میں ریاستی مخلوط سرکار کی حصولیابیوں کی تفاصیل بیان کیں۔پلوامہ میں وزیر خزانہ ڈاکٹر حسیب درابو ضلع سطح کی سب سے بڑی تقریب میں مہمان خصوصی کی حیثیت سے شرکت کرنے والے تھے، تاہم ان کی آمد کسی وجہ سے ممکن نہیں ہوسکی جس کے بعد ڈپٹی کمشنر پلوامہ جی ایم ڈارنے مارچ پاسٹ پر سلامی لینے اور پرچم لہرانے کی رسم انجام دی۔لداخ خطے کے لیہہ اور کرگل اضلاع سے بھی یوم جمہوریہ کی تقاریب کے اہتمام کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں۔ ۔ان تمام مقامات پر اسکولی طلبہ و طالبات نے تمدنی پروگرام بھی پیش کئے جبکہ تحصیل صدر مقامات سے بھی ایسی ہی تقریبات منعقد ہونے کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں جن کے دوران مختلف سرکاری افسران نے ترنگا لہرایا۔مجموعی طور ریاست بھر میں منعقد ہونے والی26جنوری کی تقریبات پر امن طور اختتام پذیر ہوئیں اور کسی جگہ کوئی ناخوشگوار واقعہ پیش نہیں آیا