اداریہ کالم کی خبریں

سرکاری ہسپتالوں میں کام کاج

16 Sep 2017 کو شائع کیا گیا

وں توانسانی زندگیوں کو بچانے اور راحت رسانی کےلئے حکومت سرکاری اسپتالوں کو جدید طرز کی مشینریوں کے ساتھ ساتھ عملہ کو متحرک کرتا ہے اور عوام کو کسی بھی مشکلات کے بغیر علاج ومعالجے کی سہولیات بہم رکھتا ہے، لیکن بد قسمتی کی بات ہے کہ ہماری ریاست میں حکومت کی طرف سے تقریباً ہر علاقے میں ایسے ہسپتال یا پرائمری ہیلتھ سنٹرل قائم ہیں جہاں حقیقی معنوں میں دیکھا جائے تو وہاں عملے کی کام اور مریضوں کا علاج و معالجہ تسلی بخش نہ ہونے کی شکایات ہیں ،پرائیویٹ اسپتالوں کی بھر مار سے سرکاری اسپتالوں کا نظام آئے مزیدپڑھیں

اب صحافی بھی نشانے پر

09 Sep 2017 کو شائع کیا گیا

کچھ روز قبل بنگلورو کی ایک معروف خاتون صحافی گوری لنکیش کو نامعلوم اسلحہ برداروں نے قتل کیا۔ خاتون صحافی کی قتل پر ہر طرف افسوس اور ناراضگی کا اظہار کیا جا رہا ہے، پورے ملک کے صحافیوں کے علاوہ بنگلورو کی صحافی برادری ابھی گوری کی ناحق قتل کی مذمت ہی کر رہی ہے کہ کئی اور صحافیوں کو مارنے کی دھمکیاں آرہی ہیں۔ بتایا جاتا ہے کہ صحافی گوری کی ہلاکت کے بعدارون دھتی رائے سمیت پانچ اور خواتین صحافیوں وقلمکاروں کوقتل کرنے کی دھمکی دی گئی ہے۔ ادھر این ڈی ٹی وے کے روش کمار کو بھی فیس بُک پر دھمکی برے پیغام مل مزیدپڑھیں

ایسا کب تک؟

26 Aug 2017 کو شائع کیا گیا

گذشتہ دنوںمبینہ طور فرضی جھڑپ کا ایک اور واقعہ اُس وقت پیش آیا، جب فوج نے مبینہ طور ہندوارہ میںایک طالب علم کو گرفتار کر کے اُسے جنگلوں میں لے کر ایک زردار جھڑپ کا ڈرامہ راچا کر اُس سے مار ڈا لا گیا۔ حالانکہ فوج کی طرف سے جھڑپ کا ڈرامہ کے ساتھ ہی عام لوگ اس شش و پنج میں پڑے تھے کہ آخر تصادم کا کیا مطلب ہے؟ علاقے میں ہر طرف چہ میگوئیاں ہو رہی تھیں، اور بالآخر وہی تھا جس کا علاقے کے لوگوں کو خدشہ ہوا تھا، ایک معصوم شہری جس کو حراست میں لے کر ایک فرضی انکائونٹر میں مار ڈالا گیا۔ آنا فاناً ہر طرف لوگ گھروں سے باہر آکر بے مزیدپڑھیں

دفعہ۳۵اے کا دفاع

19 Aug 2017 کو شائع کیا گیا

بھارت کے سابق وزیرخارجہ یشونت سنہا ایک بار پھر کشمیر دورے پر ہیں، یہاں آکرانہوں نے کئی سرکردہ لیڈروں جن میں گورنر، وزیراعلیٰ اور اپوزیشن لیڈر عمر عبداہ بھی شامل ہیں، ملاقاتیں کیں ۔ بتایا جاتا ہے کہ اس دوران ان لیڈروں کے ساتھ کئی امور پر بات چیت ہوئی ۔ ریاست کی آئین ہند میں موجود دفعہ35A پر بھی گفتگو ہوا۔ سابق مرکزی وزیر یشونت سنہا نے اپنے بیان میں زوردیا ہے کہ مرکزی سرکار اس دفعہ کے حوالے سے اپنا موقف واضح کرے ۔ مذکور آئینی دفعہ کے حوالے سے کشمیر کو یہ ضمانت حاصل ہے کہ ریاست کے پشتنی باشندوں کے بغیر یہاں کوئی بھی مزیدپڑھیں

اورساجھے داری توڑی

14 Aug 2017 کو شائع کیا گیا

جب یکم مارچ2015 کو مفتی محمد سعید نے ریاست کے 12ویں وزیراعلیٰ کی حیثیت سے جموں یونیورسٹی کے زور آور سنگھ آڈیٹوریم میں حلف لیا اور کشمیری عوام کی 23 دسمبر 2014سے طویل انتظار کے بعد ساری قیاس آرائیاں حقیقت میں بدل گئی۔ اس طرح سے پی ڈی پی اور بی جے پی اتحاد کی سرکار معرض وجود میں لائی گئی اور دونوں پارٹیاں اقتدار میں ساجھے دار کے طور پر سامنے آگئیں۔ اُس وقت بحیثیت وزیراعلیٰ مفتی محمد سعید نے وزیراعلیٰ بننے کے پہلے ہی دن بی جے پی پی ڈی پی مشترکہ ایجنڈے کے پس منظر میں پریس کانفرنس میں پُر امن چنائو مزیدپڑھیں

اعتدال کی زندگی

19 Jun 2017 کو شائع کیا گیا

مقدس مہینہ یعنی ماہ رمضان میںہم باقی مہینوں سے کچھ زیادہ ہی اللہ کی بارہ میں عجز و انکساری سے دعائیں مانگتے ہیں، صداقات و خیرات بھی ادا کرتے ہیں، نمازوں کا اہتمام پابندی سے کرتے ہیں، لیکن روزوں کا اصل مقصد حاصل نہیں کر پاتے ہیں، اس مہینے میں بھی لوگوں کی زندگی میں کوئی اسلامی رنگ نظر نہیں آتا ہے۔ ہمارے ہاتھوں میں رحم کے بجائے ظلم ہوتا ہے،اعتدال کہیں پر نظر نہیں آتا، اللہ کے رسولﷺ نے فرمایا ہے کہ بہت سے روزہ دار ایسے ہیں جنہیں فاقوں کے سوا کچھ حاصل نہیں ہوتا ہے ہمیں سوچنا چاہیے کہیں ہم ایسے ہی روزداروں میں شامل تو مزیدپڑھیں

اب وردی والوں کا احتجاج

24 Apr 2017 کو شائع کیا گیا

9 اپریل کو سرینگر ضمنی پارلیمانی نشست کے چنائو عمل کے دوران اگرچہ ضلع بڈگام میں متعدد جگہوں پر مظاہرے ہونے کے ساتھ ساتھ مظاہرین اور فورسز کے درمیان کئی جگہوں پر جھڑپیں بھی ہوئیں تاہم مختلف جھڑپوں کے دوران 8 نوجوان مارے بھی گئے۔ اس کے بعد صورتحال میں لگاتار ابتری دیکھنے کو ملی۔ فوج کی طرف سے ظلم و زیادتیوں کے کئی ایک ویڈیو بھی سوشل میڈیا پر وائریل ہوئے، جس پر کئی ایک لوگوں نے حیرانگی کے ساتھ ساتھ افسوس کا اظہار کیا تاہم کئی ایک تعصب کے شکار افراد نے فوج کی طرف سے ایسی کارروائیوں کو جاری رکھنے کی مزیدپڑھیں

عدم دلچسپی کیوں؟

04 Apr 2017 کو شائع کیا گیا

ب جبکہ ضمنی پارلیمانی چنائو چندہی دنوں کے بعد ہونے والے ہیں تاہم وادی میںچنائوکا ماحول کہیں بھی نظر نہیں آرہا ہے اور آئے روز کچھ نہ کچھ اس طرح کا ہوتا ہے کہ جیسا لگتا ہے کہ انتخابات خوش اسلوبی سے ہونا مشکل ہے۔ آئے دن کہیں نہ کہیں اور کسی نہ کسی طرح حالات بگڑتی جاتی ہے، حالانکہ رواں ماہ کی9 اور12 اپریل کو سرینگر اور اننت ناگ میں ضمنی پارلیمانی انتخابات ہونے والے ہیںتاہم دیکھنے میں آتا ہے دونوں پارلیمانی نشستوں کے امیدا الیکشن کے لئے اس طرح سرگرم نہیں ہیں جس طرح کی پہلے ہوا کرتے تھے ۔ حالانکہ یہ الگ بات ہے کہ گذشتہ الیکشنوں میں مزیدپڑھیں

ہائے اقتدار وائے اقتدار

11 Feb 2017 کو شائع کیا گیا

اقتدار اور اقتدار کے بغیر لیڈران کی کیفیت الگ الگ سی ہوتی ہے، عام طور پر دیکھنے کو مل رہا ہے کہ جب ایک انسان کے پاس اقتدار ہوتا ہے تو وہ اقتدار کے زور سے کسی کا بھی نہیں سنتا ، حتیٰ کہ اس کو غلط اورصحیح کی تمیز بھی نہیں رہتا۔ اقتدار کے وقت سب کچھ بھول کر خالص اقتدار کے مزلے لوٹنے کی طرف گامزن رہتا ۔ اقتدار میں رہنے والے لوگوں کو جب اقتدار نہیں رہتا ،اقتدار نہ رہنا انہیں بہت زیادہ ستاتا ہے یہاں تک کہ ان کو اصلیت نظر آتی ہے ان کو سچ اور جھوٹ میں تمیز کرنے کا شعور آتاہے۔ گذشتہ دنوں سابق وزیراعلیٰ مزیدپڑھیں

2016افراتفری کا سال

27 Dec 2016 کو شائع کیا گیا

سال2016 ہم سے رخصت ہو رہا ہے اور اب ہم نئے سال یعنی 2017 میں داخل ہونے جا رہے ہیں۔ اس طرح سے ہم سے 21ویں صدی کا ایک اور سال رخصت ہو رہا ہے۔ یہ صدی کا 16واں سال ہے۔ یہ سال کشمیر کے لئے کسی بھی لحاظ سے بہتر نہ رہا۔ کہیں بھی اور کسی بھی شعبے میں کوئی نئی ترقی نہ دیکھی گئی۔ پوری دنیا کی طرح کشمیر کے لئے بھی 2016 کا سال مایوس کن رہا ۔2016 نے کشمیریوں کو آہوں و سسکیوں کے سوا کچھ بھی نہ دیا ۔ اس سال میں عوام کی مشکلات میں بہت زیادہ اضافہ ہوگیا۔ سال کے شروع میں بہت سے لوگوں نے امید ظاہر کی تھی کہ یہ سال مسئلہ مزیدپڑھیں