خبریں

صورہ ہسپتال میں بڑے پیمانے پر جنگ جاری / ملازمین اپنے ہی ڈائریکٹر کے خلاف صف آرا

صورہ میڈیکل انسٹیچوٹ میں کام کررہے ملازمین نے الزام لگا یا ہے کہ ہسپتال میں بڑے پیمانے پر خرد برد کرنے کے علاوہ انتظامی سطح پر انارکی پائی جاتی ہے ۔معلوم ہوا ہے کہ ہسپتال میں قائم ملازم یونین نے حکومت پر زور دیا ہے کہ انسٹی چیوٹ کے ڈائریکٹر کو فوری طور ہٹایا جائے اور ان کی جگہ ایک نیا سربراہ مقرر کیا جائے ۔ ملازم یونین کے کئی لیڈروں کو اس وقت گرفتار کیا گیا جب وہ اپنے مجوزہ احتجاجی پروگرام پر عمل کرنے کی غرض سے یہاں جمع ہورہے تھے ۔ صبح سویرے مقامی پولیس تھانے سے آئے کئی اہلکاروں نے ان پر ہلہ بول دیا اور ملازم یونین کے کئی لیڈروں کو گرفتار کیا گیا ۔وادی کے ایک سینئر ٹریڈ یونین لیڈر اشتیاق بیگ نے اس نمائندے سے فون پر بات کرتے ہوئے الزام لگایا کہ پولیس ایکشن کرکے ہسپتال کا ڈائریکٹر اپنی بے ضابطگیوں پر پردہ ڈالنے کی کوشش کررہاہے ۔ ان کا کہنا تھا کہ پولیس ایکشن سے ڈائریکٹر کی بوکھلاہٹ اور بدحواسی کا مظاہرہ ہوتا ہے ۔ انہوں نے اس عزم کا اظہار کیا کہ ملازمین اس وقت تک دم نہیں لیں گے جب تک موجودہ ڈائریکٹر کو تبدیل کراکے ان کی جگہ کسی دیانتدار اور قابل دائریکٹر کو تعینات نہ کیا جائے ۔ موجودہ ڈائریکٹر کو لوٹ کھسوٹ کا ماہر قرار دیتے ہوئے ایک اور یونین لیڈر نے انکشاف کیا کہ حکومتی اہلکاروں خاص کر پولیس کے کرائم برانچ کو مطلع کرنے کے باوجود کہیں سے کوئی کاروائی نہ کی گئی ۔ ان کا الزام تھا کہ موجودہ ڈائریکٹر نے ہسپتال کو ایک کباڑ خانے میں تبدیل کیا ہے جہاں اقربا پروری اور رشوت ستانی عروج کو پہنچ چکی ہے ۔انسٹیچوٹ کے یہ ملازم الزام لگارہے ہیں کہ یہاں علاج معالجے کے لئے آنے والے مریضوں اور تیمار داروں کے ساتھ سخت نازیبا سلوک کیا جاتا ہے اور ہسپتال میں تعینات ڈاکٹر غریب مریضوں کا علاج کرنے کے بجائے نجی پرائیویٹ پریکٹس میں مصروف رہتے ہیں ۔ یاد رہے صورہ ہسپتال وادی کا واحد ہسپتال ہے جہاں کوئی بھی ڈاکٹر کسی بھی صورت میں مریضوں کو داخل کراسکتا ہے نہ ان کا کسی بھی سطح پر پرائیویٹ علاج معالجہ کرسکتا ہے۔ اس کے باوجود کئی ڈاکٹر اس طرح کے ناجائز کام میں ملوث پائے جاتے ہیں ۔ملازم یونین لیڈروں کا کہنا ہے کہ انہوں نے اس حوالے سے ہسپتال کے ڈائریکٹر کو بروقت مطلع کیا تھا لیکن کوئی کاروائی نہ ہوئی ۔ اب انہوں نے ایک بار پھر ان دھاندلیوں کو سامنے لانے کا اعلان کیا ہے ۔اس پر ہسپتال میںجنگ کا سماں پایا جاتا ہے ۔ مریضوں کا کوئی پرسان حال نہیں ہے ۔ انہیں سخت مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔پچھلے کئی روز سے یہاں آنے والے مریضوں کی تعداد میں بہت کمی آگئی ہے ۔