خبریں

کشمیر بھارت کا اٹوٹ انگ

کانگریس اور بھارتیہ جنتا پارٹی نے کشمیر کو شہ رگ قرار دینے سے متعلق پاکستانی فوج کے سربراہ کے بیان پر شدید ردعمل ظاہر کرتے ہوئے یہ بات زور دیکر کہی ہے کہ جموں کشمیر بھارت کا اٹوٹ حصہ ہے اور دنیا کی کوئی طاقت اس سے الگ نہیں کرسکتی۔ کانگریس اور بھارتیہ جنتا پارٹی نے اپنے سیاسی اختلافات سے بالاتر ہوکر جنرل راحیل شریف کے اْس بیان پر برہمی کا اظہار کیا ہے جس میں انہوں نے کشمیر کو پاکستان کی شہ رگ قرار دیا اور مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اقوام متحدہ کی قراردادوں پر عمل کرنے پر زور دیا۔ اس سلسلے میں سینئر کانگریس لیڈر اور مرکزی وزیر خزانہ پی چدمبرم نے کہا ’’ہم اس بیان کو مسترد کرتے ہیں، میں نہیں سمجھتا کہ دنیا کے کسی بھی جمہوری ملک کو اس بات میں کوئی شک ہے کہ کشمیر بھارت کا اٹوٹ حصہ ہے اور رہے گا‘‘۔ انہوں نے کہا کہ رواں لوک سبھا انتخابات میں ریاستی لوگوں کی شرکت اس بات کا برملا ثبوت ہے کہ یہ بھارت کی ایک ریاست ہے۔ اس ضمن میں ان کا کہنا تھا ’’چند روز قبل ہی لوگوں نے بھاری تعداد میں انتخابات میں حصہ لیا، وہ لوگ ماضی میں بھی ایسا کہتے آئے ہیں، میں سمجھتا ہوں کہ ہر وقت ہم کو ردعمل ظاہر کرنے کی ضرورت نہیں ہے،یہ صرف دھمکیاں ہیں اور ہمیں اس کا معقول جواب دینا چاہئے‘‘۔ بھاجپا کے لیڈر روی شنکر پرساد نے کہا ’’پاکستانی فوجی سربراہ کی طرف سے اس طرح کی اشتعال انگیزی ناقابل قبول ہے، بھارت جانتا ہے کہ اس کی ضروریات کیا ہے لیکن اس طرح کی دخل اندازی بے معنی اور بلا جواز ہے ‘‘۔ انہوں نے مزید کہا ’’میں بی جے پی کی طرف سے اس بیان کی مذمت کرتا ہوں اور امید ظاہر کرتا ہوں کہ اب کی بار مرکزی وزارت خارجہ اس کا معقول جواب دے‘‘۔